کیا آپ جانتے ہیں کہ ڈبل روٹی کب ایجاد ہوئی اور اسے کیسے بنایا جاتا ہے؟ جانیں

ڈیلی نیوز! ڈبل روٹی تقریباً ہر فرد کے گھر میں آتی ہے، اسے لوگ ناشتے میں کھانا پسند کرتے ہیں۔ گوندھے ہوئے آٹے میں خمیری اجزاء ملا کر، پھر سانچے میں ڈھال کر پکائی جانے والی روٹی کو ڈبل روٹی کہا جاتا ہے۔ بعدازاں اسے چوکور شکل میں کاٹ لیا جاتا ہے۔ ہر ملک میں ڈبل روٹی تیار کرنے کا طریقہ مختلف ہے، کہیں نمک ملے آٹے یا میدے سے تو کہیں

آلو، مٹر یا چاول کا آٹا ملا کر اسے مزیدار بنانے کی کوشش کی جاتی ہے.اس منفرد غذا کے بارے میں مشہور ہےکہ 3 ہزار سال پہلے مصر میں اسے بنانے کا آغاز ہوا تھا۔ وہاں کے لوگ گوندھے ہوئے آٹے میں گھی اور کھانے کا سوڈا شامل کرکے اسے بھٹی میں پکاتے تھے۔ ڈبل روٹی بنانے کے اسی طرح کے نمونے مصر کے مقبروں میں بھی ملتے ہیں۔ بہت سی خواتین ڈبل روٹی سے گھروں میں شام کی چائے کے لیے کچھ نمکین ڈشز بناتی ہیں۔ میٹھے کے طور پر شاہی ٹکڑے بے حد مشہور ہیں جو اکثر گھروں میں دعوتوں کے موقعوں پر بنائے جاتے ہیں۔

Leave a Comment

error: Content is protected !!